Umair Ali Anjam | Hadsa Hone Ko Hay | حادثہ ہونے کو ہے۔۔۔۔عُمیر علی انجم

Umair Ali Anjum, Mob: 0300-2441828 E-mail: umairumair49@yahoo.com

شاعر: عُمیر علی انجم
نام کتاب: حادثہ ہونے کو ہے!
صفحات: 128
قیمت : 300روپے
اہتمام:حسن بیان پبلی کیشنز کراچی، عمیر علی انجم ایک خوبصورت لب و لہجے کے شاعرہیں ۔ انتساب:اپنے والدین کے نام۔
اِس کتاب میں عمیر علی انجم پر لکھے گئے خوبصورت مضامین، غزلیں شامل ہیں۔ کتاب کا سر ورق، طباعت اور کاغذ دلکش ہے۔ اُسلوب تازہ کار ہے ۔ مجموعہ میں اعتبار ساجد، مزمل علی، وصی شاہ کے مضامین شامل اشاعت ہیں۔ وصی شاہ لکھتے ہیں کہ عمیر علی انجم کی شاعری پڑھتے ہوئے آپ پرعمیر کی شخصیت کھلتی چلی جائے گی اور عمیر علی انجم کے ظاہری وجود سے جس محبت اور خلوص کی کرنیں پھوٹتی نظر آتی ہیں ویسی ہی محبت کی خلوصکی چاندنی عمیر علی انجم کی شاعری کو بھی روشن کیے ہوئے ہے۔
عمیر علی انجم’’حادثہ ہونے کو ہے! ‘‘ میں سے چند اشعار ملاحظہ کیے ہیں،
میرا رستہ ضرور بدلے گا
گھر کا نقشہ ضرور بدلے گا
*
اپنا خوب بہاتے رہنا
باغ میں پھول کھلاتے رہنا
*
زیست یادوں کے ساتھ جاری ہے
اب تو جو چیز ہے تمہاری ہے

مبصر:صدام حسین
***

Viewers: 3396
Share