Shahroom Khan Wali | Ghazal | اے زہدِ ستم گر تجھے تو بہ کی پڑی ہے

شاہ روم خان ولی کراچی۔ پاکستان ای میل: muslim_karachi@yahoo.com غزل کس کشمکشِ ہجر میں کیا تشنہ لبی ہے اے زہدِ ستم گر تجھے تو بہ کی پڑی ہے سا ون […]

شاہ روم خان ولی
کراچی۔ پاکستان
ای میل: muslim_karachi@yahoo.com

غزل

کس کشمکشِ ہجر میں کیا تشنہ لبی ہے
اے زہدِ ستم گر تجھے تو بہ کی پڑی ہے
سا ون کے مہینے میں ابھی دیر لگے گی
فی الحال میری آنکھ میں اشکوں کی لڑی ہے
سائے سے بڑا قد تو کسی کا نہیں ہو تا
قامت میرے یارومیرے سائے سے بڑی ہے
میں چیخ رہا ہو ں کوئی آ کر تو نکالے
دیوار مری روح کے ملبے پہ گری ہے
اے چاند ذرا دیکھ کے آنا کہ مقابل
زلفوں کو بکھیرے وہ سرِ شام کھڑی ہے
ابدال کئی عشق کے گزرے ہیں جہاں میں
شاہ روم زمانے میں محبت کا ولی ہے
*۔۔۔*

Viewers: 8788
Share